نظر نہیں آرہا کہ حکومت سازی کیلئے بننے والا اتحاد زیادہ دیر تک چل سکتا ہے، جاوید لطیف

16 ماہ والی اتحادی حکومت لینا غلط فیصلہ تھا آج بھی حکومت لینے کا فیصلہ غلط ہے-فائل فوٹو

ہماری جماعت نہیں چاہتی تھی کہ شہباز شریف ان حالات میں وزیر اعظم بنیں، لیگی رہنما جاوید لطیف
لاہور: لیگی رہنما جاوید لطیف نے کہا ہے کہ مسلم لیگ ن کا حکومت میں آنے کا فیصلہ درست نہیں اور یہ فیصلہ مجبوری میں کیا گیا ہے۔ سابق رکن قومی اسمبلی اور سینئر رہنما ن لیگ جاوید لطیف نےایک پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے پارٹی قیادت کے فیصلے پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ 16 ماہ والی اتحادی حکومت لینا غلط فیصلہ تھا آج بھی حکومت لینے کا فیصلہ غلط ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ میری دعا ہے کہ یہ حکومتی اتحاد چلے لیکن مجھے نظر نہیں آ رہا کہ یہ سیاسی اتحاد زیادہ دیر تک چل سکتا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ہماری جماعت نہیں چاہتی تھی کہ شہباز شریف ان حالات میں وزیر اعظم بنیں۔پی ٹی آئی کی جانب سے آئی ایم ایف کومراسلہ لکھنے کے معاملے پر سوال کا جواب دیتے ہوئے لیگی رہنما نے پی ٹی آئی پر تنقید کی۔ انہوں نے سوال اٹھایا کہ پی ٹی آئی والے آئی ایم ایف سے کیا مطالبہ کر رہے ہیں؟

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں